sheikh saadi quotes

824
3687
sheikh saadi quotes 2
sheikh saadi quotes 2

sheikh saadi quotes 2

نیکی اور دانیائی کا مقام 

حضرت سعدی رحمتہ اللہ علیہ بیان فرماتے ہے کہاایک درویش جس کی پیشانی سے نیکی اور دانائی کا نور زاہر ہو رہا تھا اور جس کا جسم جوانوں کی طرح مضبوط تھا . اس حالت میں ایک بادشاہ کے پاس پہنچا کہ اس کے لباس پر اوپر نیسچے سینکڑوں پیوند لگے ہوئے تھے بادشاہ بی دانا اور مردم شناس تھا .
اس نے دریش کی بات سنی تو اندازہ کر لیا کہ اس شخص کی خدمت مفید ثابت ہو گی اور اسے اپنے ملازموں میں شامل کر لیا دریش نے غسل کر کے نیا لباس پہنا اور اپنے کامو میں مصروٖف ہو گیا
.اور پھر ایسی ہوشمندی سے خدمات دی کہ ترقی کرتا ہوا وزیراعظم کے عہدے تک پہنچ گیا

پہلا وزیر اس نئے وزیر سے حسد کرنے لگا اور اس کوشش میں لگ گیا کہ اس کی کوئی غلطی معلوم ہو تو بادشاہ کے علم میں لائے اور اسے سزا دلوائے لیکن درویش وزیراعظم ایسا عقل مند اور نیک دل تھا کہ کسی کام میں عیب نکالا ہی نہ جاسکتا تھا.

بہت عرصے بعد حسد وزیر کو ایسی بات معلوم ہوئی کہ وہ بادشا ہ کو درویش سے بدظن کر سکتا تھا بات یہ ہوئی کہ دو ایسے غلاموں سے جن کو بادشاہ ان کے خوبصورت ہونے کی وجہ سے بہت پسند کرتا تھا ان کی درویش وزیراعظم سے دوستی ہو گئی یہ دونوں غلام درویش وزیراعظم کو بہت زیادہ نیک اور عقل مند ہونے کی وجہ سے بہت پسند کرتے تھے اور فرصت کے وقت اس کے پاس جایا کرتے تھے درویش وزیراعظم بی ان سے بہت شفقت سے

sheikh saadi quotes 2

باتیں کرتا تھا حاسد وزیراعظم نے ان کی اس پاکیزہ دوستی کو ایک اور ہی رنگ دیا اور نمک مرچ لگا کر من گھڑت داستان بادشاہ ک سنا دی کہ درویش وزیراعظم بہت بد چلن ہے اور جناب کے خوبرو غلاموں کو ورغلا رہا ہے
بادشاہ سنی سنائی باتو پر یقن نہ کرتا تھا اس نے الٹا شکایت کرنے والے حاسد وزیراعظم کہ جھڑک دیا تو اس کی قابلیت سے حسد کرتا ہے لیکن اتفاق سے ان ہی دنوں ایک ایسی بات ہوئی کہ حاسد وزیر کو سچا بن جانے کا موقہ مل گیا ہوا یہ کہ درویش وزیراعظم نے کسی وجہ سے غلام کی طرف دیکھا اور جیسے ہی دونو کی نظریں ملی غلام مسکرا پڑا حاسد وزیر ہر وقت تاق میں رہتا تھا اس نے فورن بادشاہ کو یہ واقہ دیکھا دیا اس نے درویش وزیراعظم کو سزا دینے کا فیصلہ کر لیا لیکن غصے کی حالت میں بھی اسے یہ بات یاد آگئی جب تک پوری تحقیق نہ کر لی جائے کسی کو سزا نہیں دینی چاہیے اس درویش وزیراعظم کو پاس بلایا اور کہا
اے شخص ہم نے تیرے بارے میں خیال کیا تھا کہ تو بہت شریف اور قابل ہے اور اسی لیے تم پر اپنی سلطنت کے راز زاہر کر کے تمھیں اپنا وزیر بنا لیا تھا لیکن ہمیں افسوس ہے ہمارا یہ اندازا ٹھیک نہ نکلا معلوم ہوا تو بہت آوارہ اور بدچلن ہے یہ کہ کر بادشاہ نے غلام کے ساتھ اشارہ بازی کا ہال سنایا اور کہا تجھے سزا ملنی چاہیے
درویش وزیراعظم سمجھ گیا کے حاسد وزیر کی چال ہے اس نے نہایت ادب سے جواب دیا جناب مالک ہے جو چاہے سزا دیں لیکن سچ بات یہ ہے جناب کے ان غلاموں سے میل جول رکھنے کا وہ مطلب ہر گز نہیں جو جناب کو بتایا گیا ہے اس کی وجہ یہ ہے کے جوانی کے دنوں میں میں بہت خوبصورت تھا جناب کہ ان غلاموں کو دیکھ کر اپنی جوانی یاد آجاتی ہے اور اسی یاد کو تازہ کرنے کے

لیے ان سے باتیں کرتا ہوں بادشاہ کو یہ بات ٹھیک معلوم ہوئی اس نے درویش وزیراعظم کع تعریف کی اسے انعام و اکرام سے

اور حاسد وزیر کو سزا د

وضاحت

حضرت سعدی رحمتہ اللہ علیہ نے اس حکایت میں دو زریں اصول بیان کیے ہیں
ایک عام آدمی کے لیے اور دوسرا حکمرانوں اور صاحب اختیار لوگو سے عام لوگو کو وہ یہ باور کراتے ہیں کہ الیٰ اوصاف ہی انسان کو خاک سے اٹھا کر افلاک پر پہچانے کا باعث ہے درویش وزیراعظم نے ان اوصاف کے باعث ترقی کی اور اپنے دشمن کی شازش لو بھی ناکام بنا دیا
حکمرانوں کے لیے حضرت سعدی رحمتہ اللہ علیہ کا یہ مشورہ ہے کی عہدوں کے لیے بہتر لوگوں کا انتخاب غصے کی حالت میں ہوش و حواس پر قابو رکھنا اور پوری تحیق کے بعد فیصلہ کرنا اصول ہیں جو حکومت کو دام اور حکمران کو حیات جادواں عطا کرتے ہیں

 

sheikh saadi quotes 2

 

SHARE
Previous articlesheikh saadi quotes
Next articleLake Saiful Muluk

824 COMMENTS

  1. What i don’t understood is actually how you are no longer actually a lot more neatly-liked than you might be right now. You’re very intelligent. You realize thus significantly in relation to this matter, made me for my part consider it from numerous various angles. Its like women and men don’t seem to be interested until it is one thing to accomplish with Woman gaga! Your individual stuffs outstanding. All the time care for it up!

  2. I have not checked in here for some time because I thought it was getting boring, but the last several posts are good quality so I guess I will add you back to my everyday bloglist. You deserve it my friend 🙂

  3. Unquestionably believe that which you said. Your favorite reason seemed to be on the net the simplest thing to be aware of. I say to you, I certainly get irked while people consider worries that they plainly don’t know about. You managed to hit the nail upon the top as well as defined out the whole thing without having side effect , people can take a signal. Will probably be back to get more. Thanks

  4. Whats Happening i’m new to this, I stumbled upon this I have discovered It positively useful and it has helped me out loads. I’m hoping to give a contribution & aid different customers like its aided me. Great job.

  5. I will right away grab your rss feed as I can’t to find your email subscription link or e-newsletter service. Do you’ve any? Kindly let me know in order that I could subscribe. Thanks.

  6. I was just searching for this info for some time. After 6 hours of continuous Googleing, at last I got it in your website. I wonder what’s the lack of Google strategy that don’t rank this type of informative websites in top of the list. Generally the top sites are full of garbage.

  7. Hello! Do you know if they make any plugins to safeguard against hackers?
    I’m kinda paranoid about losing everything I’ve worked
    hard on. Any recommendations?

  8. Hiya, I’m really glad I have found this information. Today bloggers publish only about gossip and net stuff and this is really frustrating. A good site with exciting content, that’s what I need. Thank you for making this website, and I’ll be visiting again. Do you do newsletters by email?

  9. Thanks for any other informative website. Where else may I am getting that kind of info written in such an ideal method? I have a project that I am just now working on, and I’ve been on the glance out for such info.

  10. Thank you for the sensible critique. Me and my neighbor were just preparing to do some research about this. We got a grab a book from our local library but I think I learned more from this post. I am very glad to see such fantastic info being shared freely out there.

  11. Hiya, I am really glad I have found this info. Nowadays bloggers publish only about gossip and internet stuff and this is actually irritating. A good blog with exciting content, that’s what I need. Thanks for making this site, and I will be visiting again. Do you do newsletters by email?

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here